سابق وزیر گائتری پرساد پرجاپتی کو ضمانت

لکھنؤ: الہ آباد ہائی کورٹ کی لکھنؤ بنچ نے عصمت دری کے معاملے میں جیل میں بند اترپردیش کے سابق وزیر گائتری پرساد پرجا پتی کو دو مہینے کا عبوری ضمانت دے دی ہے۔
لکھنؤ کے کنگ جارج میڈیکل کالج میں زیر علاج گائتری پرساد پرجا پتی نے کورونا وائرس انفیکشن کا حوالہ دے کر ضمانت کی عرضی داخل کی تھی۔جسٹس وید پرکاش ویش نے سابق وزیر کو میڈیکل گراونڈ پر جمعہ سے دو مہینے کے لئے عبوری ضمانت دے دی ہے۔ عدالت نے ان کو دو۔دو لاکھ روپئے کے دو ضمانتی اور پانچ لاکھ کے ذاتی مچلکے پر ضمانت دی ہے۔الہ آباد ہائی کورٹ کی لکھنؤ ڈویژن نے انہیں متاثرہ یا اسکے کنبے کے اراکین پر دباو بنانے یا متاثر نہ کرنے کی ہدایت دی ہے۔
عدالت نے حکم دیا ہے کہ وہ عبوری ضمانت کے دوران ملک چھوڑ باہر نہیں جائیں گے۔قابل ذکر ہے کہ گائتری پرساد پرجا پتی کے خلاف لکھنؤ کے گوتم پلی پولیس اسٹیشن میں نابالغ کے ساتھ عصمت دری کا مقدمہ درج ہے۔

Advertisement

Related Articles