مدھیہ پردیش کہیں نہ بن جائے ‘اُڑتا مدھیہ پردیش، بیداری مہم شروع: اوما

بھوپال، جون۔بھارتیہ جنتا پارٹی کی سینئر لیڈر اور مدھیہ پردیش کی سابق وزیر اعلیٰ اوما بھارتی نے مدھیہ پردیش کے ‘اُڑتا مدھیہ پردیش نہ بن جانے کے اندیشے کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ وہ شراب بندی کے سلسلے میں اپنی بیداری مہم دوبارہ شروع کر رہی ہیں۔محترمہ بھارتی نے اپنے ٹویٹ کے ذریعے کہا کہ ان کی اور وزیر اعلیٰ شیوراج سنگھ چوہان کے درمیان تقریباً ڈیڑھ ماہ قبل امتناع کے بارے میں بات ہوئی تھی۔ اس کے بعد انہوں نے دہلی میں اس موضوع پر پارٹی تنظیم کی سینئر ترین قیادت سے بات کی۔ اس سلسلے میں ریاستی پارٹی تنظیم کے سینئر انچارجوں سے بھی بات چیت ہوئی ہے۔انہوں نے کہا کہ تمام میٹنگوں میں سب شراب کے خلاف متفق تھے۔ سب کا ماننا تھا کہ ریاست میں شراب پینے کی جگہ نہیں ہونی چاہیے۔ انہوں نے کہا کہ اس کے بعد اب ڈیڑھ ماہ ہو گیا ہے۔ مذاکرات کے نتائج کا انتظار کرتے ہوئے وہ ایک آگاہی مہم شروع کر رہی ہیں کیونکہ یہ مہم پارٹی اور حکومت کی پالیسی کے مطابق ہے۔محترمہ بھارتی نے کہا کہ اس مہم کو تیز کرنا ضروری ہے۔ پنجاب کی مثال دیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ہر منشیات کا ایک دوسرے سے تعلق ہے اور ہمیں غلطی سے مدھیہ پردیش کو ‘اڑتا مدھیہ پردیش نہیں بنانا چاہیے۔

Advertisement

Related Articles