مرکزی وزیر کی برخواستگی کے لئے پرینکا کا مون دھرنا

لکھنؤ:،اکتوبر،لکھیم پور کھیری معاملے میں مرکزی مملکتی وزیر برائے داخلی امور اجئے مشرا ٹینی کی برخواستگی کے مطالبے کے ساتھ کانگریس کے ملک گیر دھرنا مظاہرہ کے تحت پارٹی جنرل سکریٹری پرینکا گاندھی واڈرا پیر کو یہاں گاندھی پرتما پہنچ کر مون خاموش رہ کر دھرنا دیا۔لکھیم پور میں کسانوں کی جیپ سے کچل کر مارنے جانے کے واقعہ کے کلیدی ملزم مرکزی وزیر کے بیٹے آشیش مشر کی گرفتاری کے باوجود کانگریس جارح رویہ اپنائے ہوئے ہے۔ پارٹی نے پہلے وزیر بیٹے کی گرفتاری اور مرکزی وزیر کی برخواستگی کے مطالبے کے ساتھ آج دھرنے کا اعلان کیا تھا اور جب آشیش سیکورٹی ایجنسیوں کی گرفت میں ہے۔ کانگریس مرکزی وزیر اجئے مشر کی برخواستگی کا مطالبہ کے ساتھ مون دھرنا دے رہی ہیں۔اس سلسلے میں لکھنؤ کے جی پی او واقع گاندھی پرتما پر پارٹی کے ریاستی صدر اجئے کمار للو، اسمبلی میں کانگریس لیڈر آرادھنا مشرا، ایم ایل سی دیپک سنگھ، کانگریس مجلس عاملہ کی رکن پرمود تیواری، سابق وزیر و میڈیا ڈپارٹمنٹ کے چئیر مین نسیم الدین صدیقی سمیت پارٹی کے تمام بڑے لیڈر آج صبح مون دھرنا دینے پہنچ گئے جبکہ یوپی میں اسمبلی انتخاب کی کمان سنبھال رہی پرینکا گاندھی واڈرا شام تقریبا سواتین بجے دھرنے کے مقام پر پہنچ گئیں۔محترمہ واڈرا کے آتے ہی بڑی تعداد میں کانگریس کارکن حضرت گنج چوراہے اور آس پاس کے علاقے میں جمع ہوگئے۔ اتوار کو بنارس کی کسان نیائے ریلی میں پرینکا گاندھی نے مرکزی وزیر اجئے مشر ٹینی کی برخواستگی تک لڑتے رہنے کا اعلان کیا تھا۔

Advertisement

Related Articles