افغانستان سے جلد 4000امریکی فوجی ہٹائے جاسکتے ہیں: ٹرمپ

واشنگٹن، امریکہ کے صدر ڈونالڈ ٹرمپ نے کہا کہ امریکہ میں تین نومبر کو ہونے والے صدارتی انتخابات سے قبل افغانستان میں تعینات امریکی فوجیوں میں سے تقریباً چار ہزا ر فوجیوں کو واپس بلایا جاسکتے ہے۔
مسٹر ٹرمپ نے ایچ بی او ٹیلی ویزن کو دیئے انٹرویو میں کہاکہ ہم بہت جلد ہی وہاں فوجیوں کی تعداد کم کرتے ہوئے یہ تعداد آٹھ ہزار کریں گے اور پھر اس میں چار ہزار کی مزید کی جائے گی۔ ابھی ہم اس پر تفصیلی بات چیت کررہے ہیں۔ ہمارے فوجی وہاں 19برسوں سے تعینات ہیں اب انہیں وہاں سے نکالنے کی تیاریاں ہیں۔
فوجیوں کو ہٹانے کا عمل اور افغانستان میں موجود رہنے والے فوجیوں سے متعلق پوچھے گئے سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ تین نومبر تک تقریباً چار سے پانچ ہزار فوجی افغانستان میں موجود رہیں گے۔
امریکی صدر کا یہ انٹرویو 28جولائی کو ریکارڈ کیا گیا تھا لیکن اس کا ٹیلی ویزن پر ٹیلی کاسٹ جمعرات کو ہوا تھا۔ امریکہ اس سال افغانستان سے پہلے ہی تین ہزار فوجیوں کو ہٹا چکا ہے۔ امریکی وزارت دفاع کے ترجمان جوناتھن ہافمین کے مطابق افغانستان میں اس وقت تقریباً 8600 امریکی فوجی ہیں۔

Advertisement

Related Articles