مایاوتی کا دلت ہراسانی پر حکومت کی تنقید

لکھنؤ: بہوجن سماج پارٹی سپریمو مایاوتی نے دلتوں اور برہمنوں کی مبینہ ہراسانی پر سابق سماج وادی پارٹی اور موجودہ یوگی آدتیہ ناتھ حکومت کو آج ایک جیسا بتایا ہے۔بی ایس پی سپریمو نے آج یک بعد یگر اپنے تین ٹوئٹس میں لکھا’سماج وادی پارٹی(ایس پی) کی سابقہ حکومت میں جیسا برہمنوں اور دلتوں کا استحصال کیا جارہا تھا ویسا ہی موجودہ بی جے پی کی حکومت میں بھی ہورہا ہے۔ اس کے ساتھ ہی مسلمانوں کو بھی ہراساں کیا جارہا ہے۔ اور انہیں جھوٹے معاملوں میں پھنسایا جارہا ہے جو کہ کافی تکلیف دہ ہے۔انہوں نے اپنے دوسرے ٹوئٹ میں لکھا’ایس پی حکومت کے دوران پوری ریاست میں بابا صاحب بھیم راؤ امبیڈکر اور عظیم دلت سنتوں کی مورتیاں توڑی گئیں اور ان کے نام پر بنے اضلاع اور اداروں کے نام بدلے گئے۔بی ایس پی سربراہ نے کہا کہ وہ کام اب بھارتیہ جنتا پارٹی کی حکومت میں ہورہا ہے۔ پہلے وارانسی اور اب جونپور کا واقعہ شرمناک ہے۔ حکومت مناسب قدم اٹھائے،بی ایس پی کا یہی مطالبہ ہے۔

Advertisement

Related Articles