آر بی آئی کی پالیسی کی شرحوں میں کوئی تبدیلی نہ ہونے کی وجہ سے بازار نے اڑان بھری

ممبئی، اپریل ۔ریزرو بینک (آر بی آئی) کی جانب سے مہنگائی کو کنٹرول کرنے اور اقتصادی رفتار کو برقرار رکھنے کے لیے پالیسی شرحوں میں کوئی تبدیلی نہ کیے جانے سے پرجوش سرمایہ کاروں کی طرف سے خرید و فروخت کے رجحان پر اسٹاک مارکیٹ گزشتہ تین دنوں کی گراوٹ سے بحال ہوئی۔ بی ایس ای کا تیس شیئروں کا حساس انڈیکس سینسیکس 412.23 پوائنٹس بڑھ کر 59447.18 پوائنٹس اور نیشنل اسٹاک ایکسچینج (این ایس ای) کا نفٹی 157.75 پوائنٹس بڑھ کر 17797.30 پوائنٹس پر پہنچ گیا۔ بی ایس ای کی چھوٹی اور درمیانی کمپنیوں کے شیئربھی منافع میں رہے۔ اس دوران مڈ کیپ 0.93 فیصد بڑھ کر 25,303.39 پوائنٹس اور اسمال کیپ 0.99 فیصد بڑھ کر 29,765.79 پوائنٹس پر پہنچ گیا۔آسمان چھوتی مہنگائی کو کنٹرول کرنے اور اقتصادی ترقی کی شرح کو بلند رکھنے کے مقصد کے ساتھ، آر بی آئی نے آج ریورس ریپو ریٹ میں 0.4 فیصد اضافے کے علاوہ دیگر تمام اہم پالیسی شرحوں میں کوئی تبدیلی نہیں کی۔ اس سے سرمایہ کاروں کے سرمایہ کاری کے جذبات کو تقویت ملی۔ خریداری کی بنیاد پر بی ایس ای کے 18 گروپوں میں تیزی رہی۔ اس عرصے کے دوران، بنیادی مواد 1.91، توانائی 1.72، ایف ایم سی جی 1.93، صنعت 1.32، یوٹیلٹیز 1.81، کنزیومر ڈیوربلز 1.25، میٹلز 1.96، آئل اینڈ گیس 1.76 اور پاور گروپ 1.76 فیصد بڑھے۔ ان کے علاوہ دیگر گروپوں میں بھی اضافہ ہوا۔عالمی مارکیٹ میں بھی تیزی کا رجحان دیکھا گیا۔ اس دوران برطانیہ کا ایف ٹی ایس ای 0.95، جرمنی کا ڈی اے ایکس 1.27، جاپان کا نکئی 0.36، ہانگ کانگ کا ہینگ سینگ 0.29 اور چین کا شنگھائی کمپوزٹ 0.47 فیصد بڑھ گیا۔

Advertisement

Related Articles