۔ 1984 سکھ فسادات کے ایک معاملے میں مجرم سجن کمار کو سپریم کورٹ سے راحت نہیں ملی

نئی دہلی، سابق وزیر اعظم اندراگاندھی کے قتل کے بعد 1984 کے دہلی سکھ فسادات کے ایک مقدمے میں عمر قید کی سزا یافتہ کانگریس کے سابق رکن پارلیمنٹ سجن کمار کو جمعہ کے روز سپریم کورٹ سے راحت نہیں ملی اور کورٹ نے انھیں ضمانت دینے سے انکار کر دیا۔
75 برس کے دہلی کانگریس کے قد آور رہنما سجن کمار کو سکھ مخالف فسادات کے ایک معاملے میں عمر قید کی سزا ملی ہوئی ہے اور وہ منڈولی جیل میں بند ہیں۔
سپریم کورٹ نے آج ان کی عرضی پر شنوائی کرتے ہوئے ضمانت دینے سے انکار کر دیا اور کہا کہ ان کی ضمانت کی عرضی پر عدالت میں بہ ضابطہ طور پر کاروائی شروع ہونے پر سماعت کی جا سکتی ہے۔

Advertisement

Related Articles